انفرادی کاؤنسلنگ

 

انفرادی کاؤنسلنگ علاج کا ایک ایسا طریقہ کار ہے جس میں مریض کی انفرادی ضروریات اور معاملات پر توجہ دی جاتی ہے۔ اس میں مریض کو یہ مکمل موقع فراہم کیا جاتا ہے کہ وہ اپنے انفرادی کاؤنسلر کے ساتھ کھل کر اپنے معاملات پر تبصرہ کر سکے۔ اس میں مریض اور کاؤنسلر کے درمیان دو طرفہ گفتگو جاری رہتی ہے۔ جس کا اصل مقصد مریض کی بحالی اور ذاتی صلاحیتوں کو فروغ دینا ہے۔

صداقت کلینک میں انفرادی کاؤنسلنگ کے طریقے کو بہت اہمیت حاصل ہے۔ جونہی کوئی مریض صداقت کلینک زیرِ علاج آتا ہے اُس کا طِبی علاج شروع کر دیا جاتا ہے۔ اس کے ساتھ ساتھ اجتماعی کاؤنسلنگ اور انفرادی کاؤنسلنگ کا بھی آغاز کر دیا جاتا ہے۔ مریض کی بیماری کی نوعیت کی جانچ پڑتال کرنے کے بعد ایک ایسے ماہر کاؤنسلر کا انتخاب کیا جاتا ہے جو خاص طور پر اس کے انفرادی معاملے کو ہینڈل کرنے کے لیے خاص صلاحیت رکھتا ہے۔ اِس کے علاوہ وہ ماہر کاؤنسلر اپنے مریض کے علاج پر مجموعی طور پر کڑی نگاہ رکھتا ہے جس میں اُس کی دوائیاں، کھانا پینا، کلاسز اور گروپس میں شرکت اور روزمرہ کے رویے شامل ہیں اور انہی تمام معاملات پر انفرادی کاؤنسلنگ کے دوران بات چیت بھی کرتا ہے تاکہ مریض کی بحالی کو ممکن بنایا جا سکے۔

انفرادی کاؤنسلنگ میں بطورِخاص مندرجہ ذیل مقاصد شامل ہوتے ہیں:
۱۔مریض کو بیماری کے بارے میں مکمل آگاہی دینا۔
۲۔بیماری کی مختلف علامات کو مینیج کرنے کے مناسب طریقے بتانا۔
۳۔مریض کو بیماری کی وجہ سے پیدا ہونے والے صدمے سے نکالنا۔
۴۔دورانِ علاج مریض کے مناسب یا غیر مناسب رویوں پر تبصرہ کرنا۔
۵۔غیر مناسب رویوں کی روک تھام کے لیے صحت مند طریقے بتانا۔
۶۔ ذہنی دباؤ کو کنٹرول کرنے کے طریقے بتانا۔
۷۔جذباتی صحت کو بہتر بنانا۔
۸۔اہل خانہ کے ساتھ تعلقات کو بہتر بنانا
۹۔ریلیپس سے بچاؤ کے طریقوں پر تفصیلی بات کرنا۔
۰۱۔بحالی کے اصولوں کی آگاہی دینا۔

انفرادی کاؤنسلنگ کا تعلق صرف اِن ڈور علاج سے نہیں ہے بلکہ یہ طریقہ کار مریض کے آؤٹ ڈور میں آ جانے کے بعد بھی جاری رہتا ہے جسے فالواپ پروگرام کہا جاتا ہے،  جس میں مریض بحالی سے متعلقہ تمام مشکلات کا ذکر اپنے کاؤنسلر سے جاری رکھتا ہے اور بروقت مدد لیتا رہتا ہے۔ اس طرح کرنے سے مریض ریلیپس سے بچا رہتا ہے اور بحالی کی راہ پر گامزن رہتا ہے۔

 

 

 

Contact Us

Got a question ? Write it down, right here; and we will reply within 24 hours.


Dear Dr. Sadaqat Ali,