Courtesy: ڈان نیوز

بال ٹیمپرنگ اسکینڈل میں ملوث ہونے پر پابندی کا شکار اسٹیون اسمتھ اور ڈیوڈ وارنر پر پابندی کے بعد آسٹریلین کرکٹ ٹیم قیادت کے بحران سے دوچار ہے اور ایسے میں تجربہ کار بلے باز ایرون فنچ نے ٹیم کی قیادت سنبھالنے کے لیے اپنی دستیابی ظاہر کردی۔بال ٹیمپرنگ اسکینڈل میں ملوث ہونے پر اسٹیون اسمتھ اور ڈیوڈ وارنر پر ایک سال کی پابندی عائد کردی گئی تھی جبکہ اس کے ساتھ ساتھ اسٹیون اسمتھ 2 سال تک قیادت نہیں کر سکیں گے جبکہ ڈیوڈ وارنر قیادت کے لیے ہمیشہ کے لیے نااہل قرار دے دیے گئے تھے۔

نشے سے نجات کیلئےایک دُکھی دل کی پکار “یہ دھواں کھا گیا ، میری روح کو، میرے چین کو ” گلوکار سلطان بلوچ کا سلگتا ہوا نغمہ ، دلگداز آواز، دل کو چھو لینے والی دھن روح کو تڑپا دینے والے بول – ولنگ ویز پروڈکشن

جنوبی افریقہ کے خلاف سیریز کے دوران ٹم پین کو آسٹریلین ٹیم کی قیادت سونپ دی گئی تھی لیکن اب آسٹریلین کرکٹ حکام ٹیم کے مستقل قائد کے حوالے سے مشاورت میں مصروف ہیں۔ٹیسٹ کرکٹ میں تو شاید ٹم پین ہی ٹیم کی قیادت کریں لیکن ون ڈے ٹیم کی قیادت آسٹریلین حکام کا اصل مسئلہ ہے کیونکہ اگلے سال کرکٹ ورلڈ کپ 2019 میں آسٹریلیا کو اپنے اعزاز کا دفاع کرنا ہے۔ایرون فنچ نے ٹیم کی قیادت میں دلچسپی کا اظہار کرتے ہوئے کہا کہ میں نے ابھی تک اس بارے میں تو نہیں سوچا لیکن میں بالکل قیادت کے لیے اپنا ہاتھ کھڑا کروں گا۔

یہ ہمارے لیے مشکل وقت ہے لیکن اگر موقع ملا تو میں ٹیم کی قیادت کرنا پسند کروں گا۔ایرون فنچ کو اس سے قبل 2014 میں آسٹریلیا کی ٹی20 ٹیم کا قائد مقرر کیا گیا تھا لیکن آسٹریلیا نے تینوں فارمیٹس میں ٹیم کی قیادت ایک ہی کپتان کو سونپتے ہوئے چھ ٹی20 میچز کے بعد ہی اسٹیون اسمتھ کو ون ڈے اور ٹیسٹ کے ساتھ ساتھ ٹی20 ٹیم کا بھی قائد مقرر کردیا تھا۔