ذہنی بیماریاں اور نشہ

چرس کیا بلا ہے؟؟؟

رسمی باتوں میں ہم نشے کی بیماری کا بہت ذکر کرتے ہیں، آخر ہم اس بیماری کے ساتھ دوسری بیماریوں جیسا سلوک کیوں نہیں کرتے؟؟؟آخر ہم چرس کی بیماری کے علاج کا اہتمام کیوں نہیں کرتے؟ چرس کی بیماری کا علاج بہت سادہ ہے،یعنی چرس کوہمیشہ کیلئے چھوڑ دینا اوراپنے موڈ مزاج ، روئیے، ماحول اور خیالات کو سنوارتے رہنا حتیٰ کہ آپ کو چرس یا دیگر منشیات کی طلب ہی نہ ہو۔

مزید معلومات

کہیں آپ بائی پو لر تو نہیں؟

بائی پولر ڈس آرڈر ایک ایسی بیماری ہے جس سے موڈ مزاج، سوچ، توانائی اور رویوں میں شدید اُتار چڑھاو پیدا ہوتا رہتا ہے۔ بائپولر ڈس آرڈر کا پچھلا نام مینک ڈپریشن تھا۔ عام طور پر، لوگ اس خرابی کو سمجھتے ہیں کیونکہ یہ صرف کسی کے مزاج پر اثر انداز ہوتا ہے، چاہے یہ توانائی کی سطح، خود اعتمادی، بادل کے فیصلے، یاداشت میں مداخلت، نیند کے پیٹرن اور بھوک کو بھی متاثر کرے.

مزید معلومات

بچوں کو سگریٹ نوشی شراب اور دیگر نشوں سے کیسے بچایا جا سکتا ہے؟

ؓؓؓبچوں سے اور دیگر نشوں کے بارے میں بات کرنی چاہیے۔ اس سے پہلے کہ ان کے دوست غلط طریقے سے ان سے بات کریں آپ خود ان سے بات کریں۔ ان چیزوں کے بارے میں بات کرنے کی جو بہترین عمر ہے وہ دس سال ہے۔ ایک ریسرچ کے مطابق جو والدین اپنے بچوں سے نشے کے بارے میں بات کرتے ہیں ان کے بچوں میں نشوں میں پہنسنے کے50% کم چانسیز ہوتے ہیں۔

مزید معلومات

شیزوفرینیا

شیزوفرینیا ایک ذہنی بیماری ہے جس میں مریض حقیقت سے دور ہوتا ہے۔ مریض کی سوچنے سمجھنے کی صلاحیت اور احساسات کچھ کر نے کی تحریک، حفظان صحت (غسل کرنا ، کپڑے تبدیل کرنا، شیو کرنا) میں خرابیا ں پیدا ہو جاتی ہیں۔ اس بیماری میں عموماً ایسی آوازیں سنائی دیتی ہیں جو کسی اور نہیں سنائی دیتی، ایسے لوگ نظر آتے ہیں جو کسی اور کو نہیں نظر آتے، بعض دفعہ یہ کہیں بیٹھے تو بیٹھے ہی رہتے ہیں اور گھنٹوں وہاں سے ہلتے نہیں ہیں۔

مزید معلومات