Important Question Answers 23

اہم سوال و جواب

دراصل وہ اپنے مریض کے نشے کے زمانے کی حرکتوں کو معاف نہیں کر پاتے۔ جب بھی وہ مریض کو دیکھتے ہیں انہیں سب کچھ یاد آنے لگتا ہے۔ کتنی ستم ظریفی ہے۔ وہ اپنے مریض کے نشے کے ساتھ گزارا کر لیتے ہیں لیکن اپنی رنجش کے ساتھ گزارا نہیں کر پاتے۔ یہ نشے کی بیماری کے علاوہ کسی اور روپ میں دیکھنے کی عمدہ مثال ہے۔ وہ اپنے مریض سے توقع رکھنے لگتے ہیں کہ وہ اپنے ماضی کے ہر ’’گناہ‘‘ کی تلافی کرے۔ پھرجب وہ کوشش کرتا ہے تو اس کی کوئی کوشش آپ کیلئے کافی نہیں ہوتی۔ دس پندرہ سالوں کے گناہ کا کفارہ کوئی کیسے ادا کر سکتا ہے؟

* مریض کی ذیادتیوں کو ہم کیسے بھلا سکتے ہیں؟
لوگ سالوں تک نشے کے مریضوں کی بیماری کو جھیلتے ہیں۔ تنگی ترشی کے علاوہ مار الگ کھاتے ہیں۔ خواتین کو میکے جانا پڑتا ہے۔ تب کہیں جا کر ان کے علاج کی نوبت آتی ہے۔ پھر ایک دن مریض علاج کے نتیجے میں نشہ چھوڑ دیتا ہے۔ مریض علاج کے بعد اپنی بحالی پر سنجیدگی سے کا م لینے لگتا ہے۔ اہل خانہ کو خوش رکھنے کی کوشش کرتا ہے۔ لیکن حیرت کا مقام ہے کہ اہل خانہ خوش نہیں ہوتے۔ وہ بات بات پر غصہ کرنے لگتے ہیں۔
یہ بھی درست نہیں کہ مریض نشہ کرنے کی وجہ سے آپ کو تنگ کرتا رہا ہے۔ مریض نشہ کرنے کی وجہ سے اہل خانہ کو تنگ نہیں کرتے، نشے کی بیماری کی وجہ سے تنگ کرتے ہیں۔ نشہ ان کے جسم میں جا کر ’’بادی‘‘ ہو جاتا ہے اور ان کی مت مار دیتا ہے۔ نشے کی بیماری کو سمجھ لینے سے بڑا فرق پڑتا ہے معاف کر دینا اور بھلا دینا آسان ہو جاتا ہے۔ بہت سے لوگوں کا خیال ہے کہ نشئی ہوتے ہی خانہ خراب ہیں اور ان سے نیکی کی کوئی امید نہیں رکھنی چاہیئے اور لوگوں کا گزارا اس قسم کے نظریات کے ساتھ بھی چل جاتا ہے لیکن اگر آپ کی زندگی میں کوئی نشے کا مریض ہے تو ایسے خیالات آپ کو اور مریض کو چین سے جینے نہیں دیں گے۔

* کیا مکمل علاج کے بعد مریض ٹھیک رہتا ہے؟
اگر علاج کے تمام تقاضے پورے کئے جائیں تو مریض مکمل طور پر بحال ہو جاتا ہے۔ علاج کو اس وقت تک مکمل تصور نہیں کیا جا سکتا جب تک کہ مریض نشے کے بغیر جینا نہیں سیکھ لیتا۔ ذیابیطس، بلڈپریشر اور دل کے مریض بہترین علاج کے باوجود بیماری سے پہلے والی حالت کو نہیں لوٹ سکتے لیکن نشے کا مریض بہترین علاج کے نتیجے میں پہلے سے بھی بہتر نظر آتا ہے۔ علم کی جس سطح پر مریض اپنے لئے مسائل پیدا کرتا ہے، مسائل سے چھٹکارا پانے کیلیئے علم کی سطح کو بلند کرنا ضروری ہے۔ دورانِ علاج مریض کے علم کی سطح کو بلند کرنے کیلئے ہی جدوجہد کی جاتی ہے۔ نشے کی بیماری سے بحالی کیلئے ایک اور بڑی منصوبہ بندی کی ضرورت ہوتی ہے۔ اس نقطے کو سمجھنے کی اشد ضرورت ہوتی ہے۔ پھرکامیابی آپ کے قدم چومتی ہے۔