کسی کو یہ بتانے کی ضرورت نہیں کہ ایک نشے کے مریض کے ساتھ رہتے ہوئے کیسا محسوس ہوتا ہے؟ نشے کی بیماری ایک فرد کو ہوتی ہے لیکن پورا گھر دکھتا ہے۔ نشے کا مریض خود کو بیمار نہیں مانتا اور نشے کے زہریلے اثرات اسے کنفیوژ رکھتے ہیں۔ جب تک اہل خانہ بیماری کو سمجھ نہیں لیتے، ان کی ہر کوشش کا اُلٹا ہی نتیجہ نکلتا ہے۔ نشے کی بیماری میں گھریلو ٹوٹکے کام نہیں آتے، باقاعدہ علاج کی ضرورت پیش آتی ہے۔ آپ خود اپنے مریض کا علاج نہیں کر سکتے، حتیٰ کہ ڈاکٹرز بھی اپنے اہل خانہ کا علاج خود نہیں کرتے۔ جذباتی وابستگی علاج میں رکاوٹ بنتی ہے، نشے کی بیماری کو چھپائے رکھنے سے بیماری بڑھتی رہتی ہے۔ اصل مشکل یہ ہے کہ مریض علاج کیلئے رضا مند نہیں ہوتا۔ یوں لگتا ہے کہ آپ کسی دیوار گریہ کے سامنے کھڑے ہیں؟

نشے کے مریض کسی کی نہیں سنتے، پر انہیں بھی علاج کی راہ دکھائی جا سکتی ہے۔ جب ہمارے پیارے اپنے پاؤں پر کلہاڑی مارنے لگیں تو ان کی زندگی میں دخل دینے کا بھی ایک طریقہ سلیقہ ہوتا ہے، اسے انٹروینشن کہتے ہیں۔ انٹروینشن ایک نئی مدبرانہ حکمت عملی ہے جو نشے اور شراب کی بیماری سے نبرد آزما خاندانوں میں روشنی کی کرنیں بکھیر رہی ہے۔ 1980ء میں جب صداقت کلینک کے دروازے کھلے تو چند ہی لوگ جانتے تھے کہ نشے کی بیماری کیا ہے؟ اس سے بھی کم لوگ یہ جانتے تھے کہ نشے کے مرض سے بحالی ممکن ہے۔ صداقت کلینک کے جامع علاج سے ان گنت تباہ حال زندگیاں سنبھل گئیں اور سینکڑوں گھر ٹوٹنے سے بچ گئے، زخم مندمل ہو گئے، بے شمار لوگوں کا وقار بحال ہوا۔ آج صداقت کلینک نشے کے علاج میں تسلیم شدہ راہنما ادارہ ہے۔

جامع علاج، مداخلت، تربیت اور نشے کی بیماری اور معلوماتی مواد کی اشاعت صداقت کلینک کا طرہ امتیاز ہے۔ ممکن ہے کہ آپ کا کوئی عزیز نشے کی علاج گاہ سے ناکام لوٹا ہو اور مرض تا حال برقرار ہو۔ یہ بھی ہو سکتا ہے کہ کامیاب علاج کے بعد اس نے دوبارہ نشہ شروع کر دیا ہو، عموماً علاج کے بعد دوبارہ نشہ کرنے والوں کے اہل خانہ اور دوست احباب علاج کی تاثیر پہ اپنا یقین کھو بیٹھتے ہیں لیکن برائے مہربانی ناامید مت ہوں۔ صداقت کلینک آئیے! ہم آپ کا اعتماد بحال کریں گے۔ چاہیں تو ہمارے مطمئن کلائنٹس سے ملیں، چاہیں تو خود ہمیں اعلیٰ ترین معیار پر پرکھیں، ایک اچھے علاج کی راہ ہموار کرنے کیلئے یہ ایک عمدہ آغاز ہو گا۔ آپ کے ذہن میں ہیں کچھ الجھے ہوئے سوال، تو آپ آئیے اور پوچھئیے، ہم سلجھائیں گے آپ کی ساری گتھیاں، جب آپ مریض کو علاج پر راضی کر کے لائیں گے تو ہم کریں گے آپ کے پیارے کا بہترین علاج اور اسے دلائیں گے نشے سے نجات۔

آپ انٹروینشن سیکھ لیں گے تو بغیر کسی زور آزمائی کے اپنے پیارے کو علاج میں لے آئیں گے۔ جو مریض خود راضی ہو کر علاج میں آتے ہیں وہ کھلی فضا میں علاج کے مراحل سے گزرتے ہیں، ان کے اہل خانہ آزادانہ ملتے ہیں۔ آج ہی ٹریننگ حاصل کیجئے، مریض کو علاج پر راضی کیجئے، بامعنی علاج اپنائیے۔ اپنے پیارے کا مستقبل روشن کیجیئے۔ گزشتہ کئی دھائیوں سے پاکستان کے چپے چپے اوردنیا بھر میں جہاں بھی پاکستانی بستے ہیں، لوگ نشے سے بحالی کیلئے آتے رہے اور صداقت کلینک ان خاندانوں کی کایا پلٹنے کا نقطہ آغاز بنتا رہا، ہمارا خواب بھی وہی ہے جو آپ کا ہے۔ یہ وہی خواب ہے جو 1980ء میں صداقت کلینک کے بانی ڈاکٹر صداقت علی نے دیکھا تھا اور آج صداقت کلینک کے 60 سے زائد ڈاکٹر، سائیکالوجسٹ، سائیکاٹرسٹ اور کاؤنسلرز شرمندہ تعبیر کر رہے ہیں۔

 

Contact Us

Got a question ? Write it down, right here; and we will reply within 24 hours.


Dear Dr. Sadaqat Ali,